9 July, 2015 21:03

NADEEM MALIK LIVE

samaa.tv/nadeemmaliklive/

09-JULY-201

جنرل کیانی اپنے بھائیوں کی کرپشن میں ملوث نہیں ہیں۔ ہارون رشید کی ندیم ملک لائیو میں گفتگو

جنرل کیانی نے کبھی اپنے بھائیوں کی سفارش نہیں کی۔ ہارون رشید

ہر ادارے کو چاہئیے کہ وہ اپنے لوگوں کا خود احتساب کرے۔ ہارون رشید

یہ نہیں ہو سکتا کہ کرپشن ہوتی رہے اور لوگ دیکھتے رہیں۔ اسد عمر

یہ کیسے ہو سکتا ہے کہ جنرل کیانی کے بھائی کرپشن کرتے رہیں اور ان کو اس کا علم نہ ہو۔ شیخ روحیل اصغر

ہر کوئی سیاست دانوں پر کرپشن کا الزام لگا دیتا ہے دوسرے ادارے اس کی اجازت نہیں دیتے۔ شیخ روحیل اصغر

جنرل راحیل شریف پہلے آرمی چیف ہیں جنہوں نے اپنے ادارے میں احتساب کا عمل شروع کیا ہے۔ شیخ روحیل اصغر

ہر حکومت کا پہلا ایجنڈا یہی رہا کہ ملک سے کرپشن کو ختم کرنا ہے لیکن یہ بڑھتی ہی رہی ہے۔ قمر زمان کائرہ

سیاست دان ٹاک شوز میں کہتے ہیں کہ ملک کو کرپشن سے پاک ہونا چاہئیے لیکن عملاْ کچھ نہیں کرتے۔ اسد عمر

سول حکومت جگہ دیتی جا رہی ہے اور دوسرے ادارے اسے پر کرتے جا رہے ہیں۔ اسد عمر

میں نے جب چارج لیا تو کہہ دیا تھا کہ جو بھی کرپشن میں ملوث ہوا نہیں چھوڑوں گا آج اس کا ثبوت دے دیا۔ جنرل حامد خان

ہمارے پاس ضیا۶ اللہ آفریدی کے خلاف کرپشن کے کافی ثبوت موجود ہیں۔ حامد خان

غیر قانونی مائننگ کی جا رہی تھی جس کی وجہ سے بیالیس کروڑ روپے کا نقصان ہوا۔ حامد خان

غیر قانونی مائننگ سے بنائے جانے والے پیسے کا حصہ ایک وزیر کو بھی جاتا تھا۔ حامد خان

سیف الرحمان نے بینظیر اور زرداری کے خلاف ایک مقدمہ بنوایا انہیں سزا بھی دلوائی لیکن سپریم کورٹ نے اس رد کر دیا۔ کائرہ

سپریم کورٹ نے کہا تھا کہ جن ججوں نے بینظیر اور زرداری کے خلاف فیصلہ دیا ہے انہیں گھر چلے جانا چاہئیے کائرہ

کائرہ صاحب ماضی کی باتیں کر رہے ہیں اب ہمیں آگے بڑھنا چاہئیے۔ شیخ روحیل اصغر

جب تک کرپشن کے معاملے کو پالیسی کے طور پر وزیراعظم کی لیڈر شپ نہیں ملے گی یہ مسئلہ حل نہیں ہو سکتا۔ کائرہ

پاکستان میں دو بہت بڑی حقیقتیں ہیں ایک یہ کہ چوری ہو رہی ہے اور دوسرے کوئی بڑا آدمی نہیں پکڑا گیا۔ اسد عمر

ملک ریاض نے سابق چیف جسٹس کے بیٹے کے خلاف کرپشن کے ثبوت دئیے تھے لیکن پھر ہوا کچھ بھی نہیں۔ کائرہ

کرپشن کو کنٹرول کرنے والے اداروں کو مظبوط کیا جائے صرف اسی طریقے سے کرپشن ختم ہو سکتی ہے۔ کائرہ