3 March, 2015 21:53

NADEEM MALIK LIVE

samaa.tv/nadeemmaliklive/

03-MARCH-2015

مجھے سینٹ کا ٹکٹ حاصل کرنے کے لئیے ایک شخص نے پندرہ کروڑ روپے کی پیشکش کی۔ عمران خان کی ندیم ملک لائیو میں گفتگو

اس شخص نے پندرہ کروڑ روپے شوکت خانم کے لئیے دینے کا کہا لیکن میں نے نہیں لئیے کیونکہ وہ پیسے سینٹ کے ٹکت کے لئیے دے رہا تھا۔ عمران خان

ہمارے نظریاتی ارکان اسمبلی نے صاف طور پر بتایا کہ انہیں سینٹ کا ووٹ دینے کے لئیے پیسوں کی پیشکش کی جا رہی ہیں۔ عمران خان

ہمارا یک ایم پی اے جاوید نسیم پیسوں کے لالچ میں شیر پاؤ سے مل گیا ہے ہم اسے کل نا اہل کریں گے۔ عمران خان

شرم کی بات ہے کہ لوگوں کے ووٹوں سے ایم پی اے بننے والا پیسے لے کر سینٹ کے لئیے ووٹ دیتا ہے۔ عمران خان

مجھے پتہ چلا ہے کہ اس وقت سینٹ کے ووٹ کے لئیے ڈھائی کروڑ روپیہ فی کس کی پیشکش کیا جا رہی ہے۔ عمران خان

سب سے پہلے نواز شریف نے انیس سو نواسی میں لوگوں کو پیسوں سے خرید کر سینٹ کے لئیے ووٹ حاصل کئیے۔ عمران خان

کیا نواز شریف اور آصٖف زرداری کو علم نہیں ہے کہ سینٹ الیکشن کے لئیے پیسہ چل رہا ہے۔ عمران خان

زرداری نے سینٹ کے لئیے ان لوگوں کو پیسوں کی پیشکش کی ہے جو ضمیر فروش ہیں۔ عمران خان

میں کل اپنے کے پی کے کے ارکان اسمبلی سے ملوں گا جس نے ہمارے نامزد امیدوار کو ووٹ نہیں دیا اسے پارٹی سے نکال دیں گے۔ عمران خان

ہم ایک ایسا طریقہ کار اختیار کریں گے کہ ہمیں پتہ چل جائے گا کہ ہمارے آدمی نے سینٹ کے لئیے کس کو ووٹ دیا ہے۔عمران خان

مجھے اگر کے پی کے میں اپنی حکومت بھی ختم کرنی پڑی تو کر دیں گے لیکن اپنے ارکان کو پیسے نہیں لینے دیں گے۔ عمران خان

سینٹ الیکشن سے ہمیں پتہ چل جائے گا کہ کون نظریاتی لوگ ہیں اور کون پیسوں کے لئیے بک گئے۔ عمران خان

میرا پرویز رشید کو چیلنج ہے کہ میرا یک روپیہ بتا دے جو میرے نام پر نہ ہو تو سیاست چھوڑ دوں گا۔ عمران خان

پرویز رشید کو نواز شریف اور اسحق ڈار سے ان کے ملک سے باہر پڑے ہوئے پیسوں کے متعلق پوچھنا چاہئیے۔ عمران خان

مسلم لیگ ن اور پیپلز پارٹی دو نہیں ایک ہی جماعت ہیں ان کا مک مکا ہو چکا ہے۔ عمران خان

ہمارے دھرنے کی وجہ سے حکومت مشکل میں آئی تو آصف زرداری نے اسے بچایا۔ عمران خان

میں تین حلقوں کے نتائج کا انتظار کر رہا ہوں اس کے بعد جیوڈیشل کمشن نہ بنا تو پھر سے سڑکوں پر آیں گے۔عمران خان

ہم اس بار سڑکوں پر نکلے تو مسلم لیگ ن کی حکومت چل نہیں سکے گی۔ عمران خان

ہمارے پاس مسلم لیگ ن کی دھاندلی کے مزید ثبوت آ چکے ہیں انہوں نے ستر لاکھ جعلی ووٹ ڈالے۔ عمران خان

گلگت بلتستان میں بھی میاں صاحب نے اپنے ایمپائر کھڑے کر دئیے ہیں۔ عمران خان

آرمی پبلک سکول پر حملے کے بعد قوم کو اکٹھا کرنے کی خاطر دھرنا ختم کیا لیکن اپنے موقف سے پیچھے نہیں ہٹا۔ عمران خان

اس سال اگست سے پہلے ایک بہت بڑی گیم ہونے والی ہے۔ عمران خان

مجھے دو ہزار پندرہ میں نئے انتخابات نظر آ رہے ہیں۔ عمران خان

کراچی میں ہم پھر بھر پور الیکشن لڑیں گے اور فوج کی نگرانی میں الیکشن کروانے کا مطالبہ کریں گے۔ عمران خان

ایک الطاف حسین ہے اور ایم کیو ایم ہے جس میں بڑے پڑھے لکھے اور شریف لوگ موجود ہیں۔ عمران خان

الطاف حسین نے لندن میں بیٹھ کر کراچی میں بڑی تباہی مچائی ہوئی ہے۔ عمران خان

ایم کیو ایم کے وہ لوگ جو پڑھے لکھے اور شریف ہیں انہیں پی ٹی آئی میں خوش آمدید کہوں گا۔ عمران خان

جنرل راحیل شریف ایک آدمی ہے جس کے جو اندر ہوتا ہے وہ وہی کہتا ہے۔ عمران خان