6 May, 2014 21:16

NADEEM MALIK LIVE

samaa.tv/nadeemmaliklive/

06-MAY-2014

حکومتیں بنانا اور گرانا میرا مقصد نہیں ہے میں اس کرپٹ نظام کو گرانا چاہتا ہوں۔ طاہر القادری کی ندیم ملک لائیو میں گفتگو

ساری حکومتیں سرمایہ دارانہ اور جاگیر دارانہ نطام کی پیداوار ہوتی ہیں۔ طاہر القادری

کسی سیاسی جماعت کے مزاج میں جمہوریت نہیں ہے اپنی پارٹی کے لوگوں سے ملازموں جیسا سلوک کرتے ہیں۔ طاہر القادری

نواز شریف کو عوام نے نہیں عدلیہ کے ایک چیف اور اس کے عملے نے منتخب کروایا۔ طاہر القادری

میں نے افتخار چوہدری پر ایک سال بعد الزام نہیں لگایا بلکہ پہلے دن عدالت میں کہا تھا کہ وہ کرپٹ ہے۔ طاہر القادری

میں پاکستانی شہری اور پاسپورٹ ہولڈر ہوں دوہری شہریت والا صرف پارلیمنٹ کا الیکشن نہیں لڑ سکتا۔ طاہر القادری

حسین حقانی کے خلاف سپریم کورٹ نے اعجاز منصور کی درخواست منظور کر لی تھی اور وہ تو پاکستانی شہری بھی نہیں تھا۔ طاہر القادری

میں افتخار احمد چہوری پر بات کر کے وقت ضائع کرنا نہیں چاہتا۔ طاہر القادری

الیکشن میں دھاندلی نہیں ہوئی تھی تو پھر عمران خان کے چار حلقوں کی تحقیقات کروانے کے مطالبے پر اعتراض کیوں ہے۔ طاہر القادری

نواز شریف کو امریکہ نے پاک فوج کو کمزور کرنے کا ایجنڈا دیا تھا اور اس کے منٹس بھی موجود ہیں۔ طاہر القادری

حامد میر پر حملے کے واقع کو استعمال کر کے فوج کو کمزور کرنے کے ایجنڈے پر عمل کیا گیا۔ طاہر القادری

میرا نواز شریف کے خاندان سے آٹھ سال تعلق رہا وہ میرا خطبہ جمعہ سننے کو آتے تھے لیکن میں نے کبھی ان سے کوئی تنخواہ نہیں لی۔ طاہر القادری

ہمارے احتجاج کے نتیجے میں ملک میں مارشل لا۶ نہیں آئے گا اگر آیا تو اس کے خلاف بھی لڑوں گا۔ طاہر القادری

میں فوج اور آئی ایس آئی کا دفاع کرتا رہوں گا لیکن میرا فوج سے کوئی تعلق نہیں ہے۔ طاہر القادری

تھائی لینڈ میں انتخابات پر دھاندلی کا الزام لگا وہاں کی سپریم کورٹ نے الیکشن کالعدم قرار دے دیا۔ طاہر القادری

ایم کیو ایم کے کارکنوں کو اٹھا اٹھا کر مارا جا رہا ہے وہ انصاف چاہتے ہیں لیکن نہیں دیا جا رہا۔ طاہر القادری

سپریم کورٹ نے اٹھاون اداروں کی لسٹ دی کہ ان کے سربراہان کا تقرر وزیراعظم نہیں کر سکتا۔ طاہر القادری

وزیراعظم نے اٹھاون میں سے پینتیس اداروں میں اپنی مرضی کے لوگوں کا تقرر کر دیا ہے۔ طاہر القادری

جس پارلیمنٹ میں وزیراعظم کبھی جانا پسند نہیں کرتا وہ جمہوری کیسے ہو سکتی ہے۔ طاہر القادری

وزیراعظم اب تک چودہ پندرہ ملکوں کے دورے کر چکے ہیں لیکن کسی ایک پر بھی پارلیمنٹ کو اعتماد میں نہیں لیا ہے۔ طاہر القادری

پچھلے ایک سال میں موجودہ حکومت نے چوبیس ارب ڈالر کے قرضے لئیے ہیں یہ ادا کون کرے گا۔ طاہر القادری

میں بزدل آدمی نہیں ہوں بہت جلد پاکستان کے عوام کے ساتھ کھڑا ہوں گا۔ طاہر القادری

مشرف کو باہر جانے دیا جانا چاہئیے نواز اور شہباز شریف بھی معاہدہ کر کے ملک سے باہر چلے گئے تھے۔ طاہر القادری

پولیو کے قطرے پلانا نہ صرف جائز ہے بلکہ واجب ہے۔ طاہر القادری

موجودہ حکمران بھی پولیو زدہ ہیں انہیں بھی پولیو کے قطرے پلانے کی ضرورت ہے۔ طاہر القادری

ہمارا احتجاج عمران خان کے ساتھ نہیں ہو گا بلکہ الگ سے راولپنڈی میں ہو گا۔ طاہر القادری